فضل الرحمن فرماتے ہیں ” ہم ن لیگ کے اتحادی ہیں لیکن نظریے پر حرف آتا ہے تو ہم میدان میں آجاتے ہیں ” ۔۔۔۔۔۔

0
615

فضل الرحمن کا نظریہ ۔۔۔۔۔۔ !

کل چور، خائن اور غدار (نااہل) کو سیاسی جماعت کی قیادت سے روکنے کا بل پیش کیا گیا جس کو ن لیگ اور جے یو آئی نے مسترد کر دیا۔ بل کے خلاف جے یو آئی کے 13 ارکان نے ووٹ ڈالا۔ 

فضل الرحمن فرماتے ہیں ” ہم ن لیگ کے اتحادی ہیں لیکن نظریے پر حرف آتا ہے تو ہم میدان میں آجاتے ہیں ” ۔۔۔۔۔۔ 

مسئلہ یہ ہے کہ نظریے پر حرف آتا ہی نہیں ۔۔ 

سود کو حلال قرار دینے کی فرمائش ہوئی۔

لبرل پاکستان بنانے کا اعلان گیا گیا۔

قبول اسلام پر پابندی لگائی گئی۔

گستاخان رسول کو تحفظ دیا گیا۔

ختم نبوت پر حملہ کیا گیا۔

لیکن مجال ہے جو نظریے پر حرف آیا ہو۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ !

ہاں کل خائن، بدکار، چور اور غدار کو قیادت سے روکنے کا بل پیش کیا گیا تو فوراً نظریے پر حرف آگیا اور بل کے خلاف ووٹ دے کر اسکو مسترد کر دیا۔

تحریر شاہدخان

a

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here